بات کہنے کی نہیں ، تُو بھی تو ہرجائ ہے ۔

پاکستانی فوج آج کل ڈائریکٹ نشانے پر ہے ، انڈیا کے paid لوگوں کی ۔ جس دن امتیاز عالم کو ایک جگہ سے بھاری رقم ملنی تھی اُس دن اتفاق سے میں وہاں کسی اور چکر میں موجود تھا ۔ بہت پیسہ ملتا ہے ان ظالم غداروں کو ۔
۲۲ کروڑ پاکستانی فوج سے بے حد محبت کرتے ہیں ۔ میرے بلاگز کی جتنی پڑھی لکھی خواتین مداح ہیں ، ان میں سے بیشتر اپنے بیٹوں کو پاکستانی وردی میں دیکھنا چاہتی ہیں ۔ اور پاکستان کے لیے شہادت کی دعا کرتی ہیں ۔ کتنا خوش قسمت ملک ہے ۔ کاش ہم یہ سمجھ جائیں ہر گند انڈیا نے شروع کیا۔
میں آج کی Times of India کی نواز شریف کا اپنے بیان پر قائم رہنے کی اسٹوری دیکھ رہا تھا ۔ کمال ہے بدمعاشی کا اور نیچے انڈینز کے کمینٹس کا ۔ یہاں تک کہ رہے تھے کے نواز شریف آخری اُمید تھی پاکستان اور ہندوستان میں صلح کے لیے ۔ کل ہی میں BBC کی خبر پڑھ رہا تھا جس میں منیزہ ہاشمی دختر فیض احمد فیض کو نئ دہلی سے واپس بھیجا گیا ۔ تالی جناب ایک ہاتھ سے نہیں بجتی ۔ کونسا امن ؟ کونسی صلح ؟ بغل میں چھری منہ میں رام رام ۔
ہمارا پانی بند کر دیا گیا ۔ منگلہ کی سورس پر موڈی اسی مہینے ۱۸ایل اور ڈیم کا افتتاح کرنے جا رہا ہے ۔ ہزاروں پاکستانی انڈین جیلوں میں مر سڑ رہے ہیں ان کا گناہ صرف یہ کہ انڈین ایجینسیوں نے نفری پوری کرنی تھی ۔ موڈی کی بکواس پاکستان سے شروع ہوتی ہے اور وہیں ختم ۔
پاکستانی فوج انشاءاللہ قائم رہے گی اور بھارت کو اپنی حدود میں رکھے گی میرا ایمان ہے اور یقین بھی ۔
وہ کہتے ہیں نہ ، having said that ، آئیے اب اصل مسئلہ کی طرف ۔ فوج کو اپنا گھر ٹھیک کرنا ہو گا ۔ تُو بھی تو ہرجائ ہے ۔ اپنے اندر سے کالی بھیڑوں کی چھٹی کروانی ہو گی ۔ حمود الرحمن کمیشن چلیں اوپن نہیں ہوا تاکہ جوانوں کا morale downنہ ہو ۔ ضیاء نے بھٹو کو پھانسی کیوں دی ؟ جنرل حمید گل نے IJI کیوں بنائ؟ مشرف نے نواز شریف کا کرپشن پر ٹرائل کی بجائے سعودیہ safe exit کیوں دی ؟ جنرل کیانی نے extension کیوں لی؟ راحیل شریف نے سعودیہ میں نوکری کیوں لی؟ قمر جاوید باجوہ نے ڈان لیکس پر ٹویٹ واپس کیوں لی ؟ یہ سارے ugly compromises تھے ۔ زاتی مفاد کی خاطر ۔ مشرف کو واپس بُلا کر اس کا ٹرائل کیوں نہیں ہو رہا ؟ زرداری اینڈ ٹیم پر رینجرز ہاتھ کیوں نہیں ڈال رہی ؟
سارا بوجھ اور ملبہ چیف جسٹس پر کیوں ڈالا جا رہا ہے ؟ پچھلے دو مہینوں میں چیف جسٹس کے کھانے سے دو دفعہ زہر نکلا ۔ یاد رہے ، نواز شریف نے جنرل آصف نواز کو زہر دے کے مارا تھا ۔ اشرافیہ پر ہاتھ زبردست ڈالیں اور بلا امتیاز ۔ ایسا نہ ہو you scratch my back I yours ، کڑا احتساب ۔ اربوں کھربوں روپیہ واپس منگوائیں ۔
کالا باغ ڈیم بنوائیں ۔ افغان مہاجرین کو نکال باہر ماریں ، اگر پاکستان میں مکمل امن چاہیے ۔ یہاں ٹرمپ نے Honduras اور Haiti کے لاکھوں کی تعداد میں موجود refugees کو deport کرنے کا صرف حکم نہیں دیا شروع کر دیا ہے ۔ ہر illegal immigrant کو ٹرمپ قانون کا دشمن اور بدمعاش گردانتا ہے ۔ اور ان سب کو نکالنے کی دلیل ان کی غیر قانونی سرگرمیوں کی دیتا ہے ۔ ہم امریکہ کو افغان مہاجرین کا نہیں بتا سکتے ؟ آخر کیوں ؟
‏DHAs کے بزنس کو کچھ دیر بند کریں ۔ ویسے تو راحیل شریف نے کافی کم کر دیا تھا اور نئے DHAs کی اوپننگ سے صاف انکار کیا تھا ۔
ماضی کو بُھول جائیں ۔ آگے چلیں ۔ چین ریفائنری بنا رہا ہے ایرانی بارڈر پر ، پاکستان ایرانی تیل سے گزارا کرے ۔ پیمنٹ چینی کرنسی میں ہو گی ۔ اپنا گھر ٹھیک کریں ، کالی بھیڑوں کو تباہ و برباد کر دیں ۔ یاد رہے ہم سب پاکستانی آپ کے ساتھ ہیں جنرل باجوہ ، اس ماں دھرتی کے لیے خون بھی حاضر ہے ۔ آپ حکم تو کریں ۔
تم میں حور وں کا کوئ چاہنے والا ہی نہیں
جلوہ طُور تو موجود ہے کوئ موسی ہی نہیں
پاکستان پائندہ باد
نزر محمد چوہان
نیوجرسی / امریکہ
مئ ۱۴، ۲۰۱۸

2 thoughts on “بات کہنے کی نہیں ، تُو بھی تو ہرجائ ہے ۔

  1. سر آپ کے بلاگز کی سب سے اچھی چیز یہ ہوتی ہے کہ تحریر مختصر مگر جامع اور تحقیق پر مبنی ہوتی ہے ایسے ہی پانی میں مدھانی نہیں ہوتی
    اور دوسرا آپ دل سے لکھتے ہیں کسی کے زیر اثر رہ کر نہیں لکھتے۔
    Keep it up
  2. جہاں پاکستان کی بھلائ کے بارے بات ہو رہی ہے وہاں اسمیں تھوڑی سی فرقہ وارانہ نفرت اور مذہبی دہشت گردی کا بھی تھوڑا ترکا لگ جاتا تو کیا ہی اچھا ہوتا جو کہ اس ملک کو تباہی کی طرف لے جا رہا ہے

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *